167

پنجاب میں ضمنی انتخابات کیلئے پولنگ، تصادم اور خون خرابے کے واقعات، الیکشن کمیشن کا نوٹس

لاہور اور فیصل آباد کے پولنگ اسٹیشنز پر مسلم لیگ ن اور

پاکستان تحریک انصاف کے کارکنوں کے درمیان ہاتھا پائی اور جھگڑے کے واقعات بھی پیش آئے۔پی پی 97 فیصل آباد میں پولنگ اسٹیشن نمبر 72 پر سیاسی مخالفین کے درمیان بزرگ شہری کے ساتھ ایک اور شخص کو پولنگ بوتھ میں جانے دینے سے روکنے پر جھگڑا ہوا۔پولنگ ایجنٹ اور ووٹر کے ساتھ آئے شخص کے جھگڑے میں بیلٹ پیپر پھٹ گیا اور اس دوران پولیس کی بھاری بھی پولنگ اسٹیشن پہنچ گئی۔ادھر پی پی 158 لاہور میں بھی مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے کارکنوں میں پولنگ اسٹیشن کے اندر جانے پر جھگڑا ہوا، اس دوران تحریک انصاف کے کارکنوں نے ن لیگ کے کارکن کا سر پھاڑ دیا

پی ٹی آئی کے کارکنوں نے الزام عائد کیا کہ ہمیں اندر جانے

سے روکا جا رہا ہے۔ن لیگی امیدوار رانا احسن شرافت اور ایم پی اے بلال اکبر کی پی ٹی آئی رہنما جمشید اقبال چیمہ سے تلخ کلامی بھی ہوئی۔رانا احسن شرافت نے کہا کہ تحریک انصاف اپنی شکست دیکھ کر اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئی ہے۔الیکشن کمیشن کا نوٹسالیکشن کمیشن نے پی پی 158 لاہور کے پولنگ اسٹیشن میں ہونے والے جھگڑے کا نوٹس لیتے ہوئے ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسر کو واقعے کا جائزہ لینے اور سکیورٹی حکام سے رابطہ کرنے کی ہدایات جاری کر دیں۔پی ٹی آئی رہنما جمشید اقبال کو گرفتار کرنے کا فیصلہپولیس کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی رہنما جمشید اقبال چیمہ کو گرفتار کرنے کا فیصلہ کیا ہے، جمشید اقبال چیمہ کو گرفتار کرنے کے لیے ٹیمیں روانہ کر دی گئی ہیں۔پولیس کے مطابق پی پی 158 میں ن لیگ کے زخمی کارکن نے جمشید اقبال چیمہ پر تشدد کروانے کا الزام لگایا ہے۔

لاہور کی 4 نشستوں پر کڑا مقابلہ متوقعضمنی انتخابات

میں سب سے بڑا دنگل لاہور کی 4 نشستوں پر ہو گا، پی پی 158 میں ن لیگ کے رانا احسن شرافت اور پی ٹی آئی کے اکرم عثمان کا مقابلہ ہے جبکہ پی پی 167 میں ن لیگ کے نذیر چوہان تحریک انصاف کے شبیر گجر کے مدِمقابل ہیں۔اسی طرح پی پی 168 میں ن لیگ کے اسد کھوکھر کا پی ٹی آئی کے علی نواز اعوان سے ٹاکرا ہے جبکہ پی پی 170 میں ن لیگ کے امین ذوالقرنین پی ٹی آئی کے ظہیر کھوکھر سے دو بدو ہیں۔ملتان میں پی ٹی آئی کے زین قریشی اور مسلم لیگ ن کے سلمان نعیم کے درمیان بھی سخت مقابلے کی توقع ہے، اس حلقے میں پیپلز پارٹی نے بھی اپنا پورا وزن مسلم لیگ ن کے پلڑے میں ڈال دیا ہے۔کہوٹہ، بھکر، خوشاب، مظفر گڑھ، ڈیرہ غازی خان اور ساہیوال کے ضمنی انتخابات میں بھی ٹکر کے مقابلے متوقع ہیں۔

Leave a Reply